Media Office Hizb ut-Tahrir Pakistan

Raheel Nawaz Regime has nothing but lies against Hizb ut Tahrir

 


Tuesday, 16th Rajab 1436 AH                            05/05/2015 CE                           No: PR15033

Press Release

National Action Plan is American Action Plan

Raheel-Nawaz Regime has nothing but lies against Hizb ut-Tahrir

On 3rd May an English newspaper published a report that Police have arrested a member of Hizb ut-Tahrir, Daniyal, from a Masjid in Johar Town and recovered huge quantity of “sectarian hate material”. The only truth is the report was that Daniyal has been arrested.

The Raheel-Nawaz regime has lost its mind. Had it not, it would not have not claimed something as ludicrous as the recovery sectarian hate material from shabab of Hizb. It is well-known that any material issued by Hizb ut-Tahrir cannot be sectarian hate material because Hizb works for the unification of the Muslim Ummah and calls for the establishment of Khilafah to every Muslim irrespective of sect.

Today in Pakistan every Islam-loving person who demands the abolishment of US Raj and implementation of Islam is being kidnapped or arrested on flimsy charges of “spreading hate”. In truth, the rulers hate the fact that Hizb accounts them openly and exposes their treacheries in order to protect the interests of Islam and Muslims. Therefore, they have started labelling criticism of their collaboration with imperialist powers as “hate speech”.

Hizb wants to make it clear to the rulers that their persistent false propaganda only reveals their own intellectual and political bankruptcy. These false allegations will not lower the stature of Hizb in the eyes of the Ummah because the Ummah knows the character of both Hizb and the traitor rulers. Therefore Hizb advises the rulers that they must repent from their action and ask forgiveness from Allah because this act won’t benefit them in this world and its recompense in hereafter is only torment and humiliation.

وَمَن يُشَاقِقِ ٱلرَّسُولَ مِن بَعْدِ مَا تَبَيَّنَ لَهُ ٱلْهُدَىٰ وَيَتَّبِعْ غَيْرَ سَبِيلِ ٱلْمُؤْمِنِينَ نُوَلِّهِ مَا تَوَلَّىٰ وَنُصْلِهِ جَهَنَّمَ وَسَآءَتْ مَصِيراً

“Whoever breaks away with the Messenger after the right path has become clear to him, and follows what is not the way of the believers, We shall let him have what he chose, and We shall admit him to Jahannam, which is an evil place to return.”

(Al-Nisa:115)

Hizb also asks the media houses: is publishing the lies of the rulers not against their Islamic and professional ethics? Or is it that the media don’t know that Hizb ut-Tahrir is a political party which only employs political and intellectual means for the establishment of Khilafah and she has no link with militancy or sectarianism? We will suffice by saying to the media what Allah says,

إِن جَآءَكُمْ فَاسِقٌ بِنَبَإٍ فَتَبَيَّنُوۤاْ

“If a sinful person comes to you with a news, verify it”

(Al-Hujurat: 6)

Shahzad Shaikh

Deputy to the Spokesman of Hizb ut-Tahrir in the Wilayah of Pakistan

 

منگل ، 16 ذی القعد ، 1436ھ                           05/05/2015                                نمبرPR15033:

نیشنل ایکشن پلان امریکی ایکشن پلان ہے

راحیل-نواز حکومت کے پاس حزب التحریر کے خلاف جھوٹ کے سواء کچھ نہیں

        3 مئی کو ایک انگریزی اخبار نے یہ خبر شائع ہوئی کہ پولیس نے حزب التحریر کے ایک رکن دانیال کو جوہر ٹاون میں ایک مسجد کے پاس سے گرفتار کیا اور اس کے پاس سے بڑی تعداد میں" فرقہ وارانہ نفرت انگیز مواد" پر مبنی لٹریچر برآمد کیا۔ اس خبر میں سوائے اس کے کوئی سچائی نہیں کہ دانیال کو گرفتار کیا گیا ہے۔

        راحیل-نواز حکومت سوچنے سمجھنے کی صلاحیت کھو چکی ہے ورنہ وہ دانیال سمیت گرفتار ہونے والے حزب کے سیکڑوں شباب کے خلاف فرقہ وارانہ نفرت انگیز مواد کی برآمدگی کا جھوٹا دعویٰ نہ کرتی۔ یہ بات ہر خاص و عام جانتا ہے کہ حزب التحریر کا شائع کردہ کوئی بھی مواد کسی بھی طرح فرقہ وارانہ نفرت آنگیز نہیں ہوتا کیونکہ حزبمسلم امہ کی یکجہتی اور اس کو عملی شکل دینے کے لئے ایک خلافت کے قیام کی دعوت بغیر کسی مسلکی امتیاز کےتمام مسلمانوں کو دیتی ہے۔

        آج ہر اسلام پسند شخص، جو پاکستان سے امریکی راج کے خاتمے اور اسلام کے نفاذ کا مطالبہ کرتا ہے، کے خلاف "نفرت انگیز مواد" رکھنے یا تقسیم کرنے کا الزام لگا کر جیل کی سلاخوں کے پیچھے پھینکا جارہا ہے۔ حکمرانوں کو حزب کا یہ کردار قطعاً پسند نہیں کہ وہ اسلام اور امت مسلمہ کے مفاد کے تحفظ کے لئے حکمرانوں کا احتساب اور ان کی غداریوں کو بے نقاب کرے ، لہٰذا انہوں نے استعماری کفار کے ساتھ گٹھ جوڑپر حکمرانوں کے  احتساب کو "فرقہ وارانہ نفرت انگیز" قرار دینا شروع کردیا ہے۔

        حزب حکمرانوں پر واضح کردینا چاہتی ہے کہ حزب کے خلاف مسلسل جھوٹا پروپیگنڈا کرنا دراصل ان کی فکری و سیاسی بانجھ پن اور حزب کی سچائی کو ثابت کرتا ہے اوراس قسم کے جھوٹے الزام لگا کر وہ حزب کو امت کی نظروں میں گرا نہیں سکتے کیونکہ امت حزب  اور غدار حکمرانوں کے کردار کو اچھی طرح سے جانتی ہے۔ لہٰذا حزب حکمرانوں کو نصیحت کرتی ہے کہ وہ ایسے عمل سے توبہ کریں جس کا فائدہ نہ تو انہیں اس دنیا میں ملے گا اور آخرت میں تو اس کے بدلے سوائے عذاب کے اور کچھ بھی نہیں ہے۔

وَمَن يُشَاقِقِ ٱلرَّسُولَ مِن بَعْدِ مَا تَبَيَّنَ لَهُ ٱلْهُدَىٰ وَيَتَّبِعْ غَيْرَ سَبِيلِ ٱلْمُؤْمِنِينَ نُوَلِّهِ مَا تَوَلَّىٰ وَنُصْلِهِ جَهَنَّمَ وَسَآءَتْ مَصِيراً

"اور جو شخص رسول کی مخالفت پر کمربستہ ہو اور راہ راست کے واضح ہو جانے کے بعد بھی اہل ایمان کی روش کے سوا کسی اور روش پر چلے تو اسے ہم اسی طرف چلتا کردیں گے جدھر وہ خود پھر گیا اور ہم اسے جہنم میں جھونک دیں گے جو بدترین جائے قرار ہے"

(النساء:115)

اس کے ساتھ ساتھ حزب میڈیا کے اداروں سےسوال کرتی ہے کہ حکمرانوں کے جھوٹ کو من و عن شائع کردینا کیا ان کی اسلامی اور پیشہ وارانہ ذمہ داریوں کی خلاف نہیں ہے؟ کیا میڈیا یہ بات نہیں جانتا کہ حزب التحریر ایک سیاسی جماعت ہے جو خلافت کے قیام کے لئے سیاسی و فکری جدہوجہد کرتی ہے اور عسکریت اور فرقہ پرستی سے اس کا کوئی تعلق نہیں ہے؟ ہم میڈیا سے صرف اتنا ہی کہیں گے کہ اللہ سبحانہ و تعالٰی فرماتے ہیں ،

إِن جَآءَكُمْ فَاسِقٌ بِنَبَإٍ فَتَبَيَّنُوۤاْ

"اگر تمہیں کوئی فاسق خبر دے تو تم اس کی اچھی طرح تحقیقی کرلیا کرو"

(الحجرات:06)

شہزاد شیخ

ولایہ پاکستان میں حزب التحریر کے ڈپٹی ترجمان


Today 3546 visitors (11072 hits) Alhamdulillah
=> Do you also want a homepage for free? Then click here! <=