Media Office Hizb ut-Tahrir Pakistan

PN 20 01 2013

Sunday, 8th Rabi ul Awwal 1434H                                 20/01/2013                                N0: PN13008

Head of Hizb ut-Tahrir's Central Contact Committee in Pakistan, Saad Jagranvi, Addresses a Public Gathering

Pakistan’s Bright Future is Tied to the Khilafah

The head of Hizb ut-Tahrir's Central Contact Committee in Pakistan, Saad Jagranvi addressed a public gathering in Lahore. It was his first major public address after his release from jail. In his speech Saad Jagranvi said that Pakistan’s bright future can only be secured with the establishment of Khilafah in Pakistan. He said the economic misery of Pakistan, humiliating and failed foreign policy, collapse of law and order, unemployment and severe energy crisis are all because of the democratic system. He said that it has been confirmed that democracy and dictatorship only serve to secure American interests and no matter how many reforms we make in the current system, only corrupt, incompetent traitors will be seated in the thrones of power.

Saad Jagranvi called to the people that only the establishment of Khilafah can bring real change to the current state of affairs. He outlined the salient features of economic, foreign and domestic policy of the Khilafah which will ensure the prosperity and security for its citizens regardless of their race, color, school of thought or religion. Saad Jagranvi motivated the people, reminding them that they only fear Allah سبحانه وتعالى and cast away the fear of the rulers and their thugs. He invited them to join Hizb ut-Tahrir for the serious effort to re-establish the Khilafah. He called upon the armed forces of Pakistan to end this circus of democracy and dictatorship, revolving and spinning for the last sixty five years. It is not allowed for them to support the Kuffar systems of democracy or dictatorship. They are obliged to provide Nussrah to Hizb ut-Tahrir for the establishment of Khilafah. The 2013 Manifesto of Hizb ut-Tahrir for Pakistan was made available for the people.

Media Office of Hizb ut-Tahrir in Pakistan

اتوار 08 ربیع الاول، 1434ھ                                               20/01/2013                                نمبر:PN13008

پاکستان میں حزب التحریر کی مرکزی رابطہ کمیٹی کے سربراہ سعد جگرانوی نے لاہور میں عوامی اجتماع سے خطاب کیا

پاکستان، خلافت اور مسلم دنیا کی وحدت

پاکستان میں حزب التحریر کی مرکزی رابطہ کمیٹی سربراہ سعد جگرانوی نے لاہور میں ایک عوامی اجتماع سے خطاب کیا۔ جیل سے رہائی کے بعد کسی عوامی اجتماع سے یہ ان کا پہلا خطاب تھا۔ سعد جگرانوی نے اپنے خطاب میں یہ قرار دیا کہ پاکستان کا روشن مسقتبل صرف اور صرف خلافت کے قیام سے منسلک ہے۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان کی معاشی بد حالی، ناکام خارجہ پالیسی، بد ترین امن و امان کی صورتحال، بے روزگاری، توانائی کے شدید بحران کی بنیادی وجہ جمہوری نظام ہے۔ سعد جگرانوی نے کہا کہ یہ بات ثابت ہو چکی ہے کہ جمہوریت اور آمریت صرف اور صرف امریکی مفادات کی تکمیل کو یقینی بناتی ہے۔ انھوں نے کہا کہ یہ بات بھی اب ثابت ہو چکی ہے کہ موجودہ نظام میں چاہے کتنی ہی اصلاحات کر لی جائیں لیکن ہمیشہ کرپٹ، ناہل اور غدار ہی حکمرانی کی کرسی پر برجمان ہوں گے۔ سعد جگرانوی نے لوگوں سے کہا کہ موجودہ صورتحال میں حقیقی تبدیلی صرف خلافت کے قیام کے ذریعے ہی ممکن ہے۔ انھوں نے کہا اللہ سبحانہ و تعالی کے حکم سے جلد ہی قائم ہونے والی خلافت کی معاشی، داخلی اور خارجی پالیسی کو پیش کیا جس کے ذریعے خلافت اپنے شہریوں کو بلا امتیاز رنگ، نسل، زبان یا مذہب انھیں مکمل جانی، مالی اور معاشی تحفظ فراہم کرے گی۔

سعد جگرانوی نے لوگوں پر زور دیا کہ وہ صرف اللہ سبحانہ وتعالی سے ڈریں اور حکمرانوں اور ان کے غندوں کے خوف کو اپنے دلوں سے نکال کر خلافت کے قیام میں حزب التحریر کا ساتھ دیں۔ انھوں نے افواج پاکستان سے کہا کہ وہ ملک میں پینسٹھ سال سے جاری جمہوریت اور آمریت کے سرکس کا خاتمہ کریں۔ انھوں نے کہا کہ افواج کے لیے یہ بات قطعاً جائز نہیں کہ وہ اللہ کے نظام کو چھوڑ کر آمریت و جمہوریت کی شکل میں کفریہ نظام کے نفاذ کے لیے اپنی قوت فراہم کریں۔ ان پر لازم ہے کہ وہ خلافت کے قیام کے لیے حزب التحریر کو نصرة فراہم کریں۔

اجتماع میں شریک لوگوں کو پاکستان کے لیے حزب التحریر کا منشور 2013 کی دستاویز بھی فراہم کی گئی۔

میڈیا آفس حزب التحریر ولایہ پاکستان


Today 3102 visitors (10053 hits) Alhamdulillah
=> Do you also want a homepage for free? Then click here! <=