Media Office Hizb ut-Tahrir Pakistan

PR 14 09 2013 Jordan


 Saturday, 8 Dhu al-Qi'dah 1434 AH                              14/09/2013 CE                           N0: 34/82

Alhamdulillah the Seminar Condemning the Crimes of America in Syria and Egypt has concluded

Under the slogan

"Our Islam Not their Democracy"

Alhamdulillah, the assembly of speeches that Hizb ut Tahrir Wilayah of Jordan called for in order to condemn the American intervention in Syria and to denounce the crimes of its agent Bashar in Syria and the crimes of its agents the rulers in Egypt, has concluded. A large gathering from the sons of Jordan of Ash-Sham answered the call of the Hizb. A large number participated in the activities of the assembly despite the rise in temperature.

The assembly commenced by recitation of verses of al-Zikr al-Hakeem (Qur'an). Then the speech of the Head of the Media Office of Wilayah of Jordan, Brother Mahmoud Qataishat followed; in his speech he warned the Muslims from relying on the Kuffar, as stated in his speech: "Here is America and all the Kaffir states from behind waging a fierce crusade on Islam and the Muslims by its own hands and those of its agents and henchmen in the Muslim land. Here it is killing Muslims in Afghanistan, Pakistan, and Yemen with its weapons and drones. And it kills Muslims in the land of Ash-Sham by the hand of its tyrant agent Bashar and it supplies him with all the means in order to survive. And it kills the Muslims in Egypt by the hands of its agent the tyrant As-Sisi in Rab'a al-Adawiyah, Nahda, and on the streets and mosques." In his speech he warned the Muslims from accepting or allowing the Kuffar from the East and the West from interfering in the affairs of the Muslims under any pretext or name whether it is military or political, because this is a betrayal to Allah, His Messenger, and the Believers. He also called the Muslims facing this tragic reality to uproot the rulers and work for the return of the Islamic authority and to establish the Khilafah state that will cut off the hands of America and the other Kaffir states that are meddling with the Muslim lands.

Brother Bilal Al Qasrawi also delivered a speech speaking about the role of America to supply the butcher Bashar with all the means of power and survival and how it conspires against Ash-Sham revolution. And in his speech he commended the sincere revolutionaries in Ash-Sham and said that they will not be fooled by the attempts of America to isolate their revolution and its demand to manufacture a new agent.

Brother Abu Bakr Fuqaha' continued with his speech, in it he warned the Muslims not to rely on the kufar and he directed an advice to the Islamic Movements in Ash-Sham and Egypt to not accept a compromise in any part of their Deen and that their aim must not just be to overthrow or elect a ruler or sit on the Ruling Chair, but instead their aim must be to implement the Shar' of Allah (swt) by establishing the Khilafah s There were slogans raised and they included: "The revolutionaries of Ash-Sham said it: ‘We will not change our Deen for your democracy.'", "Until when will my blood in Ash-Sham and Egypt be sacrificed for the West?", "They lied and said:" The solution is in democracy, so the result was the massacre of Rab'a Al- Adawiyah" and "Your intervention is an aggression and an aid to your helpers". The local and international Media covered the assembly that had a noticeable security presence. Media outlets conducted many press interviews with the Head of the Media office and a number of participants.

Media Office of Hizb ut-Tahrir

In the Wilayah of Jordan

ہفتہ، 8 ذیقعد،، 1434ھ                                   14/09/2013                              نمبر34/82:

شام اور مصر میں امریکی جرائم پر مذمتی جلسہ اللہ کے فضل سے اختتام کو پہنچا

"ہمارا اسلام نہ کہ ان کی جمہوریت"

اللہ کے فضل و کرم سے حزب التحریر  ولایہ اردن کی جانب سے شام میں امریکی مداخلت اور اپنے ایجنٹ بشار اور مصر میں اپنے ایجنٹوں کے جرائم کی پردہ پوشی کی مذمت کے سلسلے میں منعقد کیا جانے والا جلسہ کامیابی سے اختتام کو پہنچا۔اس جلسے میں شرکت کے لیے شام کی سرزمین اردن کے باشندوں کی ایک بڑی تعداد نے حزب کی دعوت پر لبیک کہا اورانتہائی گرم موسم کےباوجود جلسے میں بہت بڑہ تعداد میں شرکت کی۔

جلسے کا افتتاح قرآن حکیم کی تلاوت سے کیا گیا۔پھر حزب التحریر ولایہ اردن کے میڈیا آفس کے انچارج  محمود قطیشات نے ابتدائی کلمات کہے،جس میں انہوں نے کفار کی طرف جھکاؤ اور ان پر اعتماد کرنے کے بارے میں محتاط رہنے پر گفتگوں کرتے ہوئے کہاکہ " یہی امریکہ اور کافر ممالک  پسے پردہ  خود اور اپنے ایجنٹوں اور کارندوں کے ذریعے اسلام اور مسلمانوں کے خلاف وحشیانہ صلیبی جنگ میں مصروف ہیں۔وہ افغانستان،پاکستان اور یمن میں اپنے اسلحے اور ڈرونز کے ذریعے مسلمانوں کو قتل کر رہے ہیں اور شام کی سرزمین پر اپنے ایجنٹ سرکش بشار کے ذریعے مسلمانوں کے خون سے ہولی کھیل رہے ہیں  اوراس کو جینے کے اسباب مہیا کر رہا ہے۔ یہی مصر میں اپنے ایجنٹ  سرکش السیسی کے ذریعے رابعہ ، النہضہ میں،سڑکوں اور مساجد میں مسلمانوں کا قتل عام کروارہےہیں "۔انہوں نے اپنے خطاب میں مسلمانوں کو خبردار کیا کہ مشرقی یا مغربی کافروں کو کسی بھی بہانے اپنے اندرونی معاملات میں سیاسی یا عسکری مداخلت کی اجازت نہ دیں کیونکہ یہ کام اللہ،اس کے رسول اور مؤمنوں سے خیانت ہے۔انہوں نے مسلمانوں پر بھی زور دیا کہ وہ اس پر آشوب دور سے نکلنے کے لیے موجودہ حکمرانوں کو اتار پھینکنے ، اسلام کے اقتدار کو واپس لانے اوراس ریاست خلافت کو قائم کرنے کے لیے جدوجہد کر یں جو امریکہ اور ان ممالک کے ہاتھ کاٹ دے گی جو اسلامی سرزمین میں دراندازی کی جسارت کریں گے۔

استاد بلال القصراوی نے بھی خطاب کیا اور شام میں میں سفاک بشار کی پشت پناہی اور شام کے انقلابی تحریک کے خلاف سازشیں کرنے کے بارے میں امریکہ کے کردار کو بے نقاب کیا۔انہوں نے شام کے مخلص انقلابیوں کو داد دی اور یہ  کہا کہ شام کے مخلص انقلابی کبھی بھی اپنے انقلاب کا رخ موڑنے کی امریکی کوششوں کو کامیاب ہو نے نہیں دیں گے اوروہ ایک ایجنٹ کی جگہ دوسرے ایجنٹ کو قبول نہیں کریں گے۔اس کے بعد استاد ابو بکرالفقہاء نے بھی خطاب کرتے ہوئے مسلمانوں کو کفار پر انحصار کرنے سے خبردار کیا  اورشام اور مصر کے اسلامی تحریکوں کو نصیحت کرتے ہوئے کہا کہ اپنے دین کے کسی بھی جزء سے پیچھے  ہٹھنے کو قبول نہ کریں اورآپ کا مقصد کسی صدر کو برطرف کر کے کسی اور کو اس کی کرسی پر برجمان کرنا نہیں،بلکہ آپ کا  نصب العین ریاست خلافت کے قیام کے ذریعے اللہ سبحانہ وتعالی کے دین کو نافذ کرنا ہونا چاہیے۔

جلسے میں زبردست نعرے بھی لگائے گئے جن میں سے کچھ یہ ہیں،"شام کے انقلابی کہتے ہیں کہ ہم اپنے دین کو تمہاری جمہوریت سے نہیں بدلیں گے"،"کب تک شام اور مصر  میں ہمارا خون  مغرب کے لیے  قربان ہوتا رہے گا"،"انہوں نے یہ کہہ کر جھوٹ بولا کہ :جمہوریت حل ہے جس کا شاخسانہ  رابعہ العدویہ تھا!" اور"تماری مداخلت دشمنی ہےاور تمہارے مددگاروں کو بچانے کے لیے ہے"۔  علاقائی اور بین الاقوامی میڈیا نے اس جلسے کو انتہائی  درجے کے سیکیوریٹی کے باوجود کیوریج دی اوربہت سے ذرائع ابلاغ  کے اداروں نے میڈیا آفس کے سربراہ  اور دوسرے شرکا کا انٹر ویو بھی کیا۔

میڈیا آفس حزب التحریر

ولایہ اردن



Today 2653 visitors (8685 hits) Alhamdulillah
=> Do you also want a homepage for free? Then click here! <=