Media Office Hizb ut-Tahrir Pakistan

PR 02 09 2015 Bangladesh

Wednesday, 18th hu al Qi’dah 1436                               02/09/2015 CE                           Ref: 1436-11/02

Press Release

Tyrant Hasina and the Agent Regime Extends the War against Islam on Behalf of the Imperialist Kafir States to Include Arresting and Remanding Sincere Muslim Women

After arresting the dignified women members of Hizb ut-Tahrir on Sunday (30 August, 2015), the shameless Detective Branch presented the sisters before the court yesterday (Tuesday, 01 September, 2015) seeking 10 days remand for them. Tyrant Hasina and her organisation of Thugs which she calls a government, a so-called government which failed to secure the capital city from the deluge on that very day which brought the city to a standstill caused by just over an hour of rainfall, had no failings in dragging these sisters to court! Having failed to face the men of Hizb ut-Tahrir, they have resorted to such desperate and cowardly acts against sincere Muslim women. Would that their dedication to Allah and His Messenger (saw) and to serving the people was only a fraction of their dedication to their masters’ War against Islam! This is what it is plain and simple. It is nothing but the American’s and the imperialist Kafir states’ War against Islam which moves Hasina and the Agent regime to take such lowly steps. The Americans and the imperialist states are undertaking their War against Islam and Muslims in every corner of the world to prevent the return of the mighty Khilafah which will free the Muslims from their clutches and lead the Muslims to becoming the Leading Ummah in all sides – political, economic and military etc. And they are using the rulers in the Muslim world including Hasina as nothing but cheap tools to fight their war.

Oh Muslims in the Security Services and the Judiciary!

What has made you become foot soldiers for America, the imperialist Kafir states and their agents in the War against Islam? One has to forsake his Deen and throw away all his sense of dignity and honour to be able to fight his own sisters for the sake of the enemies of Islam and their agents, to detain them, to keep them away from their families, to drag them to court, to seek remand for them, and to give the verdict of remand. We remind you of the hadith of RasulAllah (saw) narrated by Abu Umamah: “Among the worst people in status before Allah on the Day of Resurrection will be a person who loses his Akhira for the sake of someone else’s Dunya.” So what if this someone else is an enemy of Islam? You know very well that arresting the sincere workers of Khilafah only serves their interests. So we call upon you to desist from such actions. And we also remind you that if you do not do so then it is not only in the Akhira that you will be from the losers but in the Dunya too when the Khilafah returns soon and you are brought to justice for your crimes against Islam and Muslims.

Oh People of Influence!

We call upon you to not be silent spectators while America and her allies target the sincere daughters of this Ummah in their War against Islam. Even in the Jahili society of Makkah when their leaders went too far against RasulAllah (saw) and the Muslims by boycotting them, the aware and thinking people took a stance against it because they respected their own selves; their sense of self-dignity did not allow them to stay silent. Remember that with influence comes responsibility and greater accountability in the Akhira. So we call upon you to use your influence and positions to reprimand the government and compel it to release the sisters immediately so that your positions and influence may be a way for attaining the good of this Dunya and the Akhira and not humiliation and shame.

Oh Muslims!

You are witnesses that America and her allies’ War against Islam which they are executing through the agents rulers of the Muslim world has completely destroyed Iraq and Afghanistan and is destroying Syria and countless other Muslim countries. Instead of sparing women and children, they have been subjected to rape, torture and death; Abu Ghraib is just one example of this. We call upon you to raise your voice against the chasing of your sincere daughters by tyrant Hasina before we see the same here and her thugs start entering each and every home because this is what they will do if their masters order them to just as they did now by arresting these sisters which was due to their masters’ order. And you will earn the wrath of Allah (swt) also like the people of Tyrant Fir’aun who submitted to his tyranny and obeyed him.

)فَلَمَّا آسَفُونَا انتَقَمْنَا مِنْهُمْ فَأَغْرَقْنَاهُمْ أَجْمَعِينَ.فَاسْتَخَفَّ قَوْمَهُ فَأَطَاعُوهُ إِنَّهُمْ كَانُوا قَوْمًا فَاسِقِينَ(

“Thus he (Fir’aun) befooled (and misled) his people and they obeyed him. Verily, they were ever a people who were disobedient. So when they angered Us, we punished them and drowned them all.

[Surah Az-Zukhruf: 54-55]

Oh People of Power, Oh Sincere Muslim Officers!

Your sisters have become targets of the War against Islam. In your hands are the means of putting a stop to this. Each passing day tyrant Hasina is exceeding in her tyranny against Islam and the Muslims of this country while you are acting only as mere spectators. For how long will this continue? We urge you to stand up, be courageous and fulfil your duty. For the sake of your sincere Muslim sisters, for the sake of Islam and the Muslims, for the sake of Allah and His Messenger remove this tyrant enemy of Islam and ally of the Kafir-Mushrik states from power and transfer the authority to us, Hizb ut-Tahrir, in order to establish the Khilafah so that the War against Islam may forever be brought to an end, not just here in Bangladesh but the entire Muslim world.

)يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اسْتَجِيبُوا لِلَّهِ وَلِلرَّسُولِ إِذَا دَعَاكُمْ لِمَا يُحْيِيكُمْ(

“Oh you who believe! Answer the Call of Allah and His Messenger when He calls you to that which gives you life”

[Surah Al-Anfal: 24]

Media Office of Hizb ut-Tahrir, Wilayah Bangladesh

 

اتوار، 18 ذی القعد، 1436ھ                             02/09/2015                                نمبر1436-11/02 :

سرکش حسینہ اور اس کی ایجنٹ حکومت نے کافر استعماری ریاستوں کی نمائندگی کرتے ہوئے اسلام کے خلاف جنگ کو مسلم خواتین کی گرفتاری تک بڑھا دیا ہے

        ہفتہ 30 اگست 2015 کو حزب التحریر کی دو معزز خواتین اراکین کو گرفتار کرنے کے بعد بے شرم تفتیشی ادارے نے دونوں محترم بہنوں کو منگل یکم ستمبر 2015 کو عدالت میں پیش کیا اور مزید دس روزہ ریمانڈ کی درخواست کی۔ سرکش حسینہ اور اس کی غنڈہ گرد تنظیم جسے یہ حکومت کہتی ہے، یہ نام نہاد حکومت تو دار الحکومت کو بھی طوفان سے محفوظ رکھنے میں ناکام ہو چکی ہے، تقریباً ایک گھنٹے سے کچھ زائد کی بارش نے تمام شہری زندگی کو مفوج کر دیا، مگر اس "حکومت" کو کوئی شرم نہیں آتی اور یہ دو خواتین کو عدالت میں گھسیٹتی ہے! حزب التحریر کے جوان مردوں کے سامنے ناکام ہو کر اب یہ بے شرم حکومت مخلص مسلم خواتین کے خلاف بزدلانہ کاروائیوں پر اتر آئی ہے۔ کاش ان کی یہ دوڑ دھوپ اسلام کے خلاف اپنے آقاوں کی جنگ کی بجائے اللہ سبحانہ و تعالیٰ، اس کے رسول اور لوگوں کی خدمت کے لیے ہو تی! یہ بالکل واضح ہے کہ یہ سب کچھ امریکہ اور اس کے اتحادی کافر استعماری ریاستوں کی اسلام کے خلاف جنگ کے سوا کچھ نہیں جس کے لیے وہ حسینہ اور اس کی ایجنٹ حکومت کو اس قسم کے گھٹیا اقدامات کے لیے متحرک کرتے ہیں۔ امریکہ اور دیگر استعماری ریاستیں دنیا کے ہر گوشے میں اسلام اور مسلمانوں کے خلاف اپنی جنگ کو پھیلا رہی ہیں تاکہ وہ نبوت کے طرز پر خلافت کے قیام کو روک سکیں، جو عنقریب مسلمانوں کو مغرب اور اس کے ایجنٹوں کے پنجوں سے چھڑائے گی، پھر امت مسلمہ ہی زندگی کے ہر شعبے جیسے سیاست، معیشت، عسکری میدان میں دنیا کی قیادت کرے گی۔ عالم اسلام کے حکمران جن میں سے ایک حسینہ بھی ہے اسلام کے خلاف کافر استعمار کی جنگ میں اس کے ہاتھ کے کٹھ پتلی کے سوا کچھ نہیں۔

        سکیورٹی اداروں اور عدلیہ میں موجود اے مسلمانو!

        تم کیوں امریکہ، استعماری کافر ریاستوں اور ان کے ایجنٹوں کی اسلام کے خلاف جنگ کے سپاہی بن چکے ہو؟ کیا کوئی مرد ایسا کر سکتا ہے کہ اپنے دین اور اپنی عزت و آبرو سے دستبردار ہو کر اسلام کے دشمنوں اور ان کے ایجنٹوں کے ساتھ مل کر اپنی مخلص بہنوں کے خلاف اعلان جنگ کرے، ان کو گرفتار کرے اور اُن کو اِن کے گھروں سے دور قید کر دے، ان کو عدالت میں گھسیٹے، ان کے ریمانڈ کا مطالبہ کرے اور ان کے ریمانڈ کےمطالبے کو منظور کرے۔ ہم تمہیں رسول اللہ کی یہ حدیث یاد دلاتے ہیں کہ، «مِنْ شَرِّ النَّاسِ مَنْزِلَةً عِنْدَ اللَّهِ يَوْمَ الْقِيَامَةِ عَبْدٌ أَذْهَبَ آخِرَتَهُ بِدُنْيَا غَيْرِهِ» "قیامت کے دن اللہ کے نزدیک مرتبے کے اعتبار سے بدترین شخص وہ ہوگا جس نے دوسروں کی دنیا بنانے  کے لیے اپنی آخرت برباد کی ہو"۔ اگر وہ "دوسرا" اسلام کا دشمن ہو تو پھر کیا حال ہو گا؟! تم اچھی طرح جانتے ہو کہ نبوت کے طرز پر خلافت کے قیام میں مصروف مخلص داعیوں کی گرفتاری صرف کفار کے مفاد میں ہے، اس لیے ہم تمہیں ان حرکتوں سے باز آنے کی تنبیہ کرتے ہیں۔ اور ہم تمہیں خبردار کرتے ہیں کہ اگر تم نے ایسا نہ کیا تو نہ صرف آخرت میں تم خسارہ پانے والوں میں سے ہوگے بلکہ دنیا میں بھی نقصان اٹھاو گے کیونکہ اللہ کے اذن سے عنقریب جب نبوت کے طرز پر خلافت قائم ہوگی تو اسلام اور مسلمانوں کے خلاف جنگی جرائم پر تمہیں احتساب کے لیے عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

        اے اثرورسوخ رکھنے والے لوگو!

        ہم آپ کو اس بات سے خبردار کرتے ہیں کہ  جب امریکہ اور اس کے اتحادی اسلام کے خلاف اپنی جنگ میں اس امت کی بیٹیوں کی حرمتوں کو پامال کرہے ہیں تو آپ بھی ہاتھ پر ہاتھ باندھ کر مت بیٹھے رہیں۔ جب کفر کے سرداروں نے رسول اللہ اور مسلمانوں سے لاتعلقی (بائیکاٹ) کا اعلان کیا تو خود کفار میں سے کئی غیرت مند لوگ قریش کے قائدین کے سامنے ڈٹ گئے جو ان کے اپنے قائدین تھے کیونکہ ان کی غیرت نے خاموش رہنا گوارا نہیں کی۔ یاد رکھو اثرو رسوخ جتنا بڑا ہو ذمہ داری بھی اتنی بڑی ہوتی ہے۔ قیامت کے دن آپ کا حساب کتاب معاشرے آپ کے اثر کے مطابق ہی ہو گا۔ اس لیے ہم آپ کو دعوت دیتے ہیں کہ اپنے اثرو رسوخ اور مناصب کو استعمال کرتے ہوئے حکومت کا ہاتھ روکیں اور اپنی بہنوں کو فورا رہا کرنے پر اس کو مجبور کریں، تاکہ آپ دنیا اور آخرت کی بھلائی پاسکیں اورذلت و رسوائی سے بچ سکیں۔

        اے مسلمانو!

        تم دیکھ رہے ہوکہ امریکہ اور اس کے اتحادی اسلام پر براہ راست اور عالم اسلام میں موجود اپنے ایجنٹ حکمرانوں کے ذریعے حملہ آور ہیں، اور عراق، افغانستان اور شام کو تباہ کر دیا گیا ہے۔ کئی اور اسلامی ممالک کو تباہ کیا جا رہا ہے، خواتین اور بچے بھی محفوظ نہیں، ان کو جنسی زیادتی، تشدد اور قتل کا سامنا ہے؛ ابو غریب کا عقوبت خانہ تو جرائم کی ایک مثال ہے۔ اے مسلمانو! ہم آپ کو پکار رہے ہیں کہ حسینہ کی جانب سے مخلص مسلم خواتین کو نشانہ بنانے کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں، اس سے پہلے کہ حکومتی کی غنڈہ گردی آپ کے گھروں میں بھی پہنچ جائے۔ اگر آپ خاموش رہے اور ان کو ان کے آقا نے حکم دیا تو وہ اس میں تردد نہیں کریں گے، بالکل ایسے ہی جیسا کہ ان دو بہنوں کو گرفتار کر لیا ہے، تب آپ پر بھی اللہ کا ایسا ہی عذاب آئے گا جیسا کہ فرعون کی قوم پر آیا تھا۔

فَاسْتَخَفَّ قَوْمَهُ فَأَطَاعُوهُ إِنَّهُمْ كَانُوا قَوْمًا فَاسِقِينَ * فَلَمَّا آسَفُونَا انْتَقَمْنَا مِنْهُمْ فَأَغْرَقْنَاهُمْ أَجْمَعِينَ

"اس نے اپنی قوم کو بیوقوف بنایا تھا اس لیے اس کی قوم اس کی اطاعت کرتی تھی اور وہ فاسق قوم تھی، جب ہمیں غصہ دلایا تو ہم نے ان سے انتقام لیا اور ان سب کو ڈبو دیا"

(الزخرف:55)

        اے مخلص مسلم افسران، اے قوت اور طاقت والو!

        اسلام کے خلاف جنگ میں آپ کی بہنوں کو نشانہ بنایا گیا ہے۔ آپ اس کو روکنے کی قدرت رکھتے ہیں۔ ہر گزرتے دن کے ساتھ اسلام اور اس ملک کے مسلمانوں کے خلاف سرکش حسینہ کی ریشہ دوانیوں میں اضافہ ہو رہا ہےجبکہ آپ ہاتھ پر ہاتھ رکھ کر محض تماشائی کا کردار ادا کر رہے ہیں۔ یہ صورت حال کب تک ایسی ہی رہے گی؟ ہم آپ کو آپ کے فرض کی ادائیگی اور بہادرانہ موقف اختیار کرنے کی دعوت دیتے ہیں۔ اپنی مخلص مسلمان بہنوں کے لیے، اسلام اور مسلمانوں کے لیے، اللہ اور اس کے رسول کی خاطر حرکت میں آئیں۔ اس سرکش اسلام کی دشمن اور کافر و مشر ک ہندو ریاست کے اتحادی کو ہٹا دیں، اس کو اقتدار سے برطرف کر دیں اور حزب التحریر کو نبوت کے طرز پر خلافت کے قیام کے لیے نصرہ دیں، تاکہ اسلام کے خلاف جنگ کی آگ کو ہمیشہ کے لیے بھجا دیا جائے، نہ صرف بنگلہ دیش میں بلکہ پورے عالم اسلام میں۔

يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اسْتَجِيبُوا لِلَّهِ وَلِلرَّسُولِ إِذَا دَعَاكُمْ لِمَا يُحْيِيكُمْ

"اے ایمان والو! اللہ اور اس کے رسول کی پکار پر لبیک کہو جب وہ تمہیں اس چیز کی طرف پکاریں جس میں تمہارے لیے زندگی ہے"

(الانفال:24)

ولایہ بنگلادیش میں حزب التحریر کا میڈیا آفس


Today 2636 visitors (8682 hits) Alhamdulillah
=> Do you also want a homepage for free? Then click here! <=