Media Office Hizb ut-Tahrir Pakistan

PR 17 09 2013 CMO

Issue No : 1434 AH / 90                      Tuesday, 11 Dhu al-Qi'dah 1434 AH                 17/09/2013 CE

Press Release

Another Martyr of Truth in Dagestan!

A martyr was elevated to his Lord – we consider him as such and not commend anyone over Allah - on the night of Sunday 15/9/2013 CE, in the city of Kizlyar in the Republic of Dagestan; a member of Hizb ut Tahrir, Abalova Abdullah, born in 1976, as treacherous hands assassinated him while he was returning to his home.

As some brothers transported brother Abdullah to his house, they noticed a black car of the model Jiguli 14 without a license plate parked close to the house of the martyr, Allah (swt) willing, and as soon as brother Abdullah got out of the car Allah’s (swt) enemies fired shots at him, seriously wounding him in the chest. Upon impact he was taken to the hospital where his pure soul left to its creator. His pure body was buried on the morning of Monday 16/9/2013 CE in the Kizlyar city cemetery.     

Indeed we are for Allah (swt) and to him we will return

We knew our brother Abdullah as a lion of Islam; virtuous, honorable, courageous, defiant of Allah’s (swt) enemies. His honesty, boldness, graciousness, and patience sparked terror in the hearts of the traitors. He was like the wind in strength and activity. He, may Allah (swt) have mercy on him, was a beam of light dispelling oppression and darkness in Dagestan.

It should be mentioned that the traitors threatened our brother Abdullah with physical liquidation numerous times. However the Noor of belief and the strength of his Iman did not allow fear to penetrate his heart, and did not call doubt as to the validity of what he was on of truth, and his confidence in his convictions were never shaken.   

And we turn to Allah Almighty, and ask that he may reward our brother Abdullah the best reward, and that he accept him to the group of the master of martyrs Hamza Bin Abdul Muttalib, confirming the saying of the Messenger (saw):

«سيد الشهداء حمزة بن عبد المطلب، ورجل قام إلى إمام جائر فأمره ونهاه فقتله»

"The master of martyrs is Hamza bin Abdul-Muttalib and a man who stood to an oppressor ruler where he ordered him and forbade him so he (the ruler) killed him."

And we ask the Almighty to assemble him with the prophets and the righteous and the martyrs, and what good companions they are. As for you the tyrants of Russia and its lackeys in the region, especially Dagestan, we pray to the Avenger, the Powerful, the Mighty to take revenge from you and fiercely kill you by your own actions, and make you an example for one who considers.

In conclusion, we in the Central Media Office of Hizb ut Tahrir can only turn to the family of our brother with Dua’a and consolation, asking Allah (swt) to inspire in them patience and fortitude. And Allah is our sufficiency, for he is our helper and on him we rely.

Central Media Office

of Hizb ut Tahrir


منگل، 11 ذیقعد،، 1434ھ                                17/09/2013                              نمبر1434 AH/90:

پریس ریلیز

داغستان میں کلمہ حق کا ایک اور شہید

اتوار کی شام 15ستمبر2013 کو جمہوریہ داغستان کے شہر کزلار میں حزب التحریر کے رکن عابالوفا عبداللہ محمد  شہادت کے رتبے پر فائز ہوکر اپنے خالق حقیقی سے جا ملے ۔ہم ان کو ایسا ہی سمجھتے ہیں اور ہم اللہ پر کسی کے بارے میں حکم نہیں چلاسکتے۔1976 م کو پیدا ہونے والے عابالوفاعبد اللہ کو  غداروں نے اس وقت قتل کردیا جب وہ اپنے گھر واپس آرہے تھے۔

چند بھائی عبد اللہ کو گھر تک چھوڑنے کے لیے ان کے ساتھ تھے جنہوں نے دیکھا کہ ایک کالے رنگ کی کار14Jiguli جو بغیر نمبر پلیٹ تھی ان کے گھر کے قریب کھڑی تھی۔جیسے ہی بھائی عبد اللہ گاڑی سے اتر کر گھر کے دروازے کی طرف بڑھے اللہ کے دشمنوں نے ان پر گولیوں کی بوچھاڑ کر دی،جن سے ان کے سینے میں گہرے زخم آئے ۔آپ کو فورا ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں آپ کی پاک روح اپنے رب کی طرف محو پرواز ہو گئی۔آپ کے جسد خاکی کو پیرکی صبح 16ستمبر2013 کو کزلار شہر کے قبرستان میں سپرد خاک کیا گیا ۔انا للہ وانا الیہ راجعون

ہم نے بھائی عبد اللہ کو اسلام کے شیروں میں سے ایک شیر پایا،انتہائی پاکباز،شریف،جرات مند،اللہ کے دشمنوں کو للکارنے والا۔یہی وجہ ہے کہ عبد اللہ نے اپنی صداقت ،جرات،تحمل اور صبر سے غداروں  کے صفوں میں کھلبلی مچادی تھی۔آپ قوت اور سرگرمی میں آندھی کی طرح تھے۔اللہ کی رحمتیں ہو آپ پر۔ آپ داغستان میں تاریکی اور ظلم کو چیر نے والی نور کی طرح تھے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ غداروں نے عبد اللہ بھائی کو جان سے ماردینے کی کئی بار دھمکیاں دے رکھی تھی،لیکن عقیدے کے نور اور ایمان کی قوت نے کبھی بھی خوف کو دل میں جگہ پانے کی اجازت نہیں دی۔وہ جس حق پر تھے اس کے بارے ان کے پاس شک کی کوئی گنجائش نہیں تھی۔اس لیے آپ کے غیر متزلز یقین میں کبھی کمی نہیں آئی۔

ہم اللہ  القدیر کے سامنے دعا گو ہیں کہ  ہمارے بھائی عبد اللہ کو بہترین جزا دے،آپ کو شہیدوں کے سرخیل حمزہ بن عبد المطلب کے گروہ میں شامل کرے،جیسا کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا ہے کہ:

(سيد الشهداء حمزة بن عبد المطلب، ورجل قام إلى إمام جائر فأمره ونهاه فقتله)

"شہدا کے سردار حمزہ بن عبد المطلب ہیں اور وہ شخص بھی جس نے ایک جابر حکمران کے سامنے کھڑے ہوکر امر بالمعروف اور نہی عن المنکر کیا اور اُس نے اِس کو قتل کر دیا"

ہم اللہ سے دعا کرتے ہیں کہ آپ کو انبیاء،صدیقین،صالحین اور شہداء کا ساتھ  نصیب فرمادے اور وہ کیا ہی زبردست ساتھی ہیں۔ اے روس کے سرکشو اور خطے ان کے کارندو ہم انتقام لینے والے اللہ القوی و  الجبار کے سامنے گڑ گڑاتے ہیں کہ وہ تم سے انتقام لے اور تمہیں خوفناک طریقے سے ہلاک کردے اور تمہیں عبرت حاصل کرنے والوں کے لیےعبرت بنادے۔

آخر میں ہم حزب التحریر کا میڈیا آفس اپنے بھائی کے گھروالوں سے بہترین انداز میں تعزیت کرتے ہیں اور اللہ سے دعاگو ہیں کہ اللہ تمہیں صبر جمیل عطا فرمائے۔اللہ ہی ہم سب کے لیے کافی ہے وہی ہم سب کا سہارا ہے۔

مرکزی میڈیا آفس حزب التحریر


Today 2636 visitors (8697 hits) Alhamdulillah
=> Do you also want a homepage for free? Then click here! <=