Media office Hizb ut-Tahrir Wilayah of Pakistan

Home

 

Tuesday, 24th Safar 1436 AH                            16/12/2014 CE                         No: PR14077

Press Release

Hizb ut-Tahrir Wilayah Pakistan condemns the massacre of innocent children in Peshawar

Enough! End the US Presence in Pakistan, the Head of the Snake

Today, 16 December 2014, armed attackers struck the Army Public School, moving from classroom to classroom, killing dozens, until it exceeded over a hundred, most of them being children!

1.          Hizb ut-Tahrir condemns this heinous crime for Allah (swt) said, مِنْأَجْلِ ذَلِكَ كَتَبْنَا عَلَى بَنِي إِسْرَائِيلَ أَنَّهُ مَنْ قَتَلَ نَفْسًا بِغَيْرِ نَفْسٍ أَوْ فَسَادٍ فِي الْأَرْضِ فَكَأَنَّمَا قَتَلَالنَّاسَ جَمِيعًا وَمَنْ أَحْيَاهَا فَكَأَنَّمَا أَحْيَا النَّاسَ جَمِيعًا Because of that, We ordained for the Children of Israel that if anyone killed a person not in retaliation of murder, or (and) to spread mischief in the land - it would be as if he killed all mankind, and if anyone saved a life, it would be as if he saved the life of all mankind.” [Surah al-Maida 5:32]

2.          Hizb ut-Tahrir reminds the Muslims that such evil massacres are organized by American intelligence to further its objectives in the region. Those who are informed of matters know well that American intelligence has infiltrated the loose tribal networks many years ago and they incite the ignorant amongst them to turn their weapons away from the crusaders who occupy Afghanistan and onto their Muslim brethren. Barbaric acts such as the killing of children are the direct outcome of American foreign policy, specifically the policies of low intensity conflict and covert, "black" operations. The covert operations are an established American ploy, practiced by its intelligence and private military all over the world, to burn countries in the fires of confusion and insecurity. These barabaric acts are then used by the regime and its masters as a justification for low intensity conflict, in the case of Pakistan, military operations in the tribal areas, which the Americans need desperately to prevent resistance to their faltering occupation of Afghanistan.

3.          Hizb ut-Tahrir directs the tribal Muslims, those who are sincerely fighting against the US occupation in Afghanistan, that they must denounce such massacres. They must not allow oppressor to speak on their behalf who is ignorant of Islam, such that he furthers the American plan through his disobedience of Allah (swt) and His Messenger (saw). It is a duty upon you to prevent such massacres that only benefit America and turn Muslim against Muslim. RasulAllah (saw) said,  انْصُرْ أَخَاكَ ظَالِمًا أَوْمَظْلُومًا    ”Support your brother, oppressed or the oppressor.” They said:يَا رَسُولَ اللَّهِ هَذَا نَنْصُرُهُ مَظْلُومًا فَكَيْفَ نَنْصُرُهُ ظَالِمًا O Messenger of Allah, supporting the oppressed is understood, but how can we support the oppressor. He said, تَأْخُذُ فَوْقَ يَدَيْهِ Seize his hands to prevent him.” [Bukhari].

4.          Hizb ut-Tahrir condemns the regime for its allowing the US to exist on our soil and organize such attacks. On the one hand the regime claims that we are fighting American agents through operations in the tribal regions, yet on the other the regime allows a huge American presence on our soil to perpetrate its evil designs. And this is why on the even when the traitorous rulers catch the American spies, such as Raymond Davis and Eugene Joel Cox, they promptly release them. This blatant contradiction is because the regime cares neither for us, nor our Deen nor the commands of our Lord, Allah (swt). Our suffering and immense losses, in terms of lives and property, are a direct consequence of the regime  making alliance with our enemies, showing affection to them, extending them sanctuary and provisions within our country, providing them an upper hand over us by which to strike us. Allah (swt) said, يَا أَ يَاأَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا لاَ تَتَّخِذُوا عَدُوِّي وَعَدُوَّكُمْ أَوْلِيَاءَ تُلْقُونَ إِلَيْهِمْ بِالْمَوَدَّةِ وَقَدْ كَفَرُوا بِمَا جَاءَكُمْمِنْ الْحَقِّ "O you who believe! Choose not My enemies who are your enemies as friends showing them affection even when they disbelieve in that truth that has come to you [Surah Mumtahina 60:1]

5.          And Hizb ut-Tahrir calls upon the sincere within the armed forces that it is you who hold the physical capability to put matters straight according to the command of Allah (swt). Cut the head of the snake and purify Pakistan of all American presence. Close the American Embassy and Consulates, which are fortresses in all but name, expel the enemies that roam the country to contact and spend dollars as they place, the US diplomats including its ambassador  as well as the US private military and intelligence operatives. And know that these matters will only be practically realized once you extend the Nussrah to Hizb ut-Tahrir for the return of the Khilafah to these lands of Pakistan, the Pure, the Good.

Media Office of Hizb ut-Tahrir in the Wilayah of Pakistan

 

منگل، 24 صفر ، 1436ھ                            16/12/2014                              نمبرPR14077:

پریس ریلیز

حزب التحریر ولایہ پاکستان پشاور میں ہونے والے معصوم بچوں کے قتل عام کی شدید مذمت کرتی ہے

بہت ہوگیا! پاکستان سے امریکی وجود کا خاتمہ کرو جو شیطانیت کا سرغنہ ہے

آج 16 دسمبر 2014 کو مسلحہ حملہ آوروں نے پشاور میں آرمی پبلک اسکول پر حملہ کیا اور ایک ایک کمرے میں جاکر سو سے زائد  معصوم بچوں کو گولیاں مار کر  شہید کردیا۔

1)              حزب التحریر ولایہ پاکستان اس گھناؤنے جرم کی شدید مذمت کرتی ہے ۔ اللہ سبحانہ و تعالٰی فرماتے ہیں،  مِنْ أَجْلِ ذَلِكَ كَتَبْنَا عَلَى بَنِي إِسْرَائِيلَ أَنَّهُ مَنْ قَتَلَ نَفْسًا بِغَيْرِ نَفْسٍ أَوْ فَسَادٍ فِي الْأَرْضِ فَكَأَنَّمَا قَتَلَ النَّاسَ جَمِيعًا وَمَنْ أَحْيَاهَا فَكَأَنَّمَا أَحْيَا النَّاسَ جَمِيعًا "اسی وجہ سے ہم نے بنی اسرائیل پر یہ لکھ دیا کہ جو شخص کسی کو بغیر اس کے کہ وہ کسی کا قاتل ہو یا زمین میں فساد مچانے والا ہو، قتل کر ڈالے تو گویا اس نے تمام انسانیت کو قتل کردیا، اور جو شخص کسی ایک کی جان بچا لے، اس نے گویا تمام انسانیت کوبچا لیا" (المائدہ:32)۔

2)              حزب التحریر مسلمانوں کو یاد دہانی کراتی ہے کہ اس قسم کے شیطانی حملے اور قتل  و غارت گری امریکی انٹیلی جنس کرواتی ہے تا کہ خطے میں اپنے مفادات کو آگے بڑھا سکے۔  وہ لوگ جو معاملات سے باخبر ہیں اس بات کو جانتے ہیں  کہ کئی سال قبل امریکی انٹیلی جنس کمزورقبائلی نیٹ ورکس میں داخل ہو گئی تھی اور ان میں موجود نا سمجھ اور انٹیلی جنس ایجنسیوں کے مکروہ حربوں سے ناآشنا لوگوں کو بھڑکایا تھا جس کے نتیجے میں ان کی بندوقوں کا رخ ،جو افغانستان میں قابض صلیبیوں کے خلاف ہونا چاہیے تھا، اپنے ہی مسلمان بھائیوں کے خلاف ہو گیا۔ اس قسم کے وحشیانہ حملے جس میں معصوم بچوں  تک کو قتل کردیا جائے دراصل اس امریکی خارجہ پالیسی کا براہ راست نتیجہ ہے جس کے تحت  خفیہ  طور پر  اس ملک کی فوج اور عوام پر حملے کرائے جاتے ہیں۔ یہ خفیہ حملے ثابت شدہ امریکی ہتھکنڈے ہیں جو اس کی انٹیلی جنس اور پرائیوٹ ملٹری دنیا بھر میں اختیار کرتی ہیں تا  کہ ہدف شدہ  ملک کو عدم تحفظ کا شکار کردیا جائے۔ پھر اس قسم کے وحشیانہ حملوں کو جواز بنا کر اس ملک کی غلام حکومتیں ملک میں امریکی مفاد کے تحت جنگ کی آگ کو جاری  و ساری رکھتی ہیں اور پاکستان کے معاملے میں ان حملوں کو جواز بنا کر قبائلی علاقوں میں فوجی آپریشن  کیے جاتے ہیں جس کی امریکہ کو افغانستان میں جاری مزاحمت کو ختم کرنے کے لئے اشد ضرورت ہے۔

3)              حزب التحریر ان قبائلی مسلمانوں سے مطالبہ کرتی ہےجو افغانستان میں قابض امریکی افواج کے خلاف لڑ رہے ہیں کہ وہ اس قسم کے وحشیانہ حملوں کی بھر پور مذمت کریں۔ انہیں کسی صورت اس بات کی اجازت نہیں دینی چاہیے کہ ان کے وکیل بن کر وہ لوگ بات کریں جو اسلام کے متعلق کچھ نہیں جانتے بلکہ اللہ اور اس کے رسول  کی نافرمانی کرتے ہوئے امریکی منصوبے کو فائدہ پہنچاتے ہیں۔ آپ پر یہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ اس قسم کے وحشیانہ حملوں کو روکیں جس کا فائدہ صرف امریکہ کو پہنچتا ہے اور یہ ایک مسلمان کو دوسرے مسلمان کا دشمن بنادیتے ہیں۔ رسول اللہ  نے فرمایا ، انْصُرْ أَخَاكَ ظَالِمًا أَوْ مَظْلُومًا، يَا رَسُولَ اللَّهِ هَذَا نَنْصُرُهُ مَظْلُومًا فَكَيْفَ نَنْصُرُهُ ظَالِمًا تَأْخُذُ فَوْقَ يَدَيْهِ "اپنے بھائی کی مدد کرو چاہے وہ مظلوم ہو یا ظالم، صحابہ نے پوچھا : اے اللہ کے رسول، مظلوم کی  مدد کرنا تو سمجھ میں آتا ہے لیکن ظالم کی مدد ہم کیسے کر سکتے ہیں، آپ نے فرمایا، اس کے ہاتھ کو پکڑو تا کہ اسے روک سکو"(بخاری)۔

4)              حزب التحریر حکومت کی پر زور مذمت کرتی ہے جس نے امریکہ کو ہماری سرزمین پر اپنے پنجے جمانے اور اس قسم کے حملے کروانے کی آزادی فراہم کررکھی ہے۔ ایک طرف تو حکومت اس بات کا دعویٰ کرتی ہے کہ وہ امریکی ایجنٹوں سے لڑ رہی ہے جبکہ دوسری  جانب حکومت نے امریکہ کو اپنے مزموم عزائم کی تکمیل کے لئے مکمل آزادی فراہم کررکھی ہے۔ یہی وجہ ہے جب کبھی  غدار حکمران کسی امریکی جاسوس کو گرفتار بھی کرلیتے ہیں جیسا کہ ریمنڈ ڈیوس  اورجوئل کاکس وغیرہ، تو انہیں فوراً رہا بھی کردیتے ہیں۔ یہ  کھلا تضاد اس لئے  ہے کیونکہ نہ تو حکمرانوں کو ہماری پروا ہے نہ ہی ہمارے دین کی اور نہ ہی اللہ سبحانہ و تعالٰی کے احکامات کی۔  ہماری تباہی بربادی  اور عظیم نقصانات کی براہ راست ذمہ داری اس حکومت پر ہے جو ہمارے دشمن کو اپنا اتحادی بناتی ہے، ان سے محبت کا اظہار کرتی ہے، انہیں محفوظ ٹھکانے فراہم کرتی ہے اور ملک میں موجود وہ تمام وسائل مہیا کرتی ہے جس کے نتیجے میں اسے ہم پر مکمل بالادستی حاصل  ہوجاتی ہے اور وہ ہم پر بھر پور طریقے سے حملہ آور ہوجاتا ہے۔ اللہ سبحانہ و تعالٰی فرماتے ہیں، يَا أَ يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا لاَ تَتَّخِذُوا عَدُوِّي وَعَدُوَّكُمْ أَوْلِيَاءَ تُلْقُونَ إِلَيْهِمْ بِالْمَوَدَّةِ وَقَدْ كَفَرُوا بِمَا جَاءَكُمْ مِنْ الْحَقِّ "اے لوگو جو ایمان لائے ہو ! میرے اور خود اپنے دشمنوں کو اپنا دوست مت بناؤ تم تو دوستی سے ان کی طرف پیغام بھیجتے ہو اور وہ اس حق کے ساتھ جو تمھارے پاس آچکا ہے کفر کرتے ہیں" (الممتحنہ:1)

5)              اور حزب التحریر افواج پاکستان میں موجود مخلص افراد کو پکارتی ہے کہ آپ ہی ہیں جو اس بات کی صلاحیت رکھتے ہیں کہ معاملات کو اللہ  سبحانہ و تعالٰی کے احکام کے مطابق صحیح کردیں۔ سانپ کے سر کو کچل دیں اور پاکستان کو امریکی نجس وجود سے پاک کردیں۔ امریکی سفارت خانے اور قونصل خانوں کو بند کردیں جو در حقیقیت ہماری سرزمین پر دشمن کے قلعے ہیں، امریکی سفارت کاروں اور انٹیلی جنس اداروں کے اہلکاروں کو  ملک بدر کردیں جو آزادی سے گھومتے پھرتے ہیں ،  لوگوں سے رابطے کرتے ہیں اور ڈالر بانٹتے ہیں۔  اور آپ  جانتے ہیں کہ عملی طور پر یہ اسی وقت ہو سکے گا جب آپ  پاکستان میں خلافت کے قیام کے لئے حزب التحریر کو نصرہ فراہم کریں گے۔

ولایہ پاکستان میں حزب التحریر کا میڈیا آفس